Who’s behind the bitcoin? بٹ کوائن کے پیچھے کون ؟

Leading US technology company Tesla has announced that it has bought کو 1.5 billion worth of bitcoins.
The company said in a statement that the bitcoin had been purchased to further diversify the remittance system, according to a US news agency report.
Tesla has also announced that it is ready to sell its products for bitcoin.
Thus, Tesla has become the first and largest carmaker to do business in bitcoins.
It may be recalled that a few days ago, Elon Musk had predicted that the bitcoin would be accepted globally as a currency.
He said investors would accept cryptocurrency for trading purposes.
He also shared his campaign on cryptocurrency on social media.
The head of SpaceX also launched a bitcoin hashtag on Twitter in recent days, after which the value of digital currency increased by 14%.

معروف امریکی ٹیکنالوجی کمپنی ٹیسلا نے اعلان کیا ہے کہ انہوں نے 1.5 بلین ڈالر مالیت کے بٹ کوائن خرید لیے ہیں۔
امریکی خبر رساں ادارے کی رپورٹ کے مطابق کمپنی نے اس حوالے سے جاری بیان میں کہا ہے کہ رقم کی نظام ترسیل کو مزید متنوع بنانے کے لیے بٹ کوائن کی خریداری کی گئی ہے۔
ٹیسلا نے یہ بھی اعلان کیا ہے کہ وہ اپنی مصنوعات کو بٹ کوائن کے عوض فروخت کرنے کے لیے بھی تیار ہے۔
اس طرح ٹیسلا بٹ کوائنز میں کاروبار کرنے والا پہلا اور سب سے بڑا کارساز ادارہ بن گیا ہے۔
یاد رہے کہ چند روز قبل ایلون مسک نے پیش گوئی کی تھی کہ بٹ کوائن کو کرنسی کے طور پر عالمی سطح پر قبول کرلیا جائے گا۔
انہوں نے کہا تھا کہ سرمایہ کار تجارتی معاملات کے لیے کرپٹوکرنسی کو قبول کرلیں گے۔
انہوں نے سوشل میڈیا پر کرپٹو کرنسی کے حوالے سے اپنی مہم سے بھی آگاہ کیا۔
اسپیس ایکس کے سربراہ کی جانب سے گزشتہ دنوں ٹوئٹر پر بٹ کوائن ہیش ٹیگ بھی چلایا گیا جس کے بعد ڈیجیٹل کرنسی کی قدر میں 14 فیصد اضافہ ریکارڈ کیا گیا۔

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *